اہم خبریں

عوام اپنے آپ کو تیار کر لے ، آنے والے دنوں میں کیا ہونیوالا ہے؟ وفاقی وزیر پٹرولیم غلام سرور نے ایسی بات کہہ دی کہ پہلے سے مہنگائی میں پسی غریب عوام ہل کر رہ گئی، بڑاعلان کر دیا گیا

  پیر‬‮ 8 اکتوبر‬‮ 2018  |  17:15
ٹیکسلا( آئی این پی)وفاقی وزیر پٹرولیم غلام سرور خان نے کہا ہے کہ ملک کو بحرانی کیفیت سے نکالنے کے لئے سخت فیصلے ناگزیر ہیں،عوام اس کے لئے اپنے آپ کو تیار کر لے ،پریشانی وقتی ہوگی ، آنے والے دن ترقی او خوشحالی کے ہونگے،تکلیفیں جتنی بھی اٹھانی پڑیں اٹھائیں گے مگر منزل تک پہنچ کر دم لیں گے،میڈیا والے انصاف سے کام لیں ان کے پینتیس سالوں کا موازنہہمارے پینتیس دنوں سے نہ کریں،یہ کم ہوا کہ ملک کے چور پابند سلاسل ہیں،میڈیا اور ڈپلومیٹک سرکلز میں یہ تاثر دیا گیا کہ شہباز شریف کے اسٹیلشمنٹ کے ساتھ

(خبر جا ری ہے)

لیگ ن ملک دشمن قوتوں کے ایجنڈے پر ملک میں سیاست کر رہی ہے جسے ہمیشہ ہمیشہ کے لئے ختم کرنا ہے ، شاہ ولی ہاوس ٹیکسلا میں سید ریاض حسین شاہ کی جانب سے منعقدہ انتخابی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ پاکستان تحریک انصاف نے روز اول سے یہ فیصلہ کیا تھا کہ ملک کے چوروں ، لٹیروں کے ساتھ کوئی ڈیل کوئی کمپرومائز اور کسی قسم کا کوئی دباو برداشت نہیں کیا جائے گا،نواز مریم کی ضمانت کا ہرگز یہ مطلب نہیں کہ انکی جان خلاصی ہوگئی ، 302 کی ضمانت والوں کو بھی پھانسی ہوتی ہے،نواز ڈیل کے حوالے سے انکا کہنا تھا کہ سعودی حکومت میں جس طرح وزیر اعظم عمران خان کو پذیرائی بخشی اس بات کو اور تقویت ملی،اور جلتی پر تیل رانا مشہود کے بیان نے کردیا،کہ شہباز شریف کے ملک کی اسٹیبلشمنٹ کے ساتھ رابطے ہیں،تاہم شہباز شریف کی گرفتاری سے یہ تاثر غلط ثابت ہوگیا،غلام سرور خان کا کہنا تھا کہ سخت فیصلے ہونگے اور عوام کو انھیں برداشت بھی کرنا ہوگا تاہم یہ سخت فیصلے وقتی ہونگے ،ہم نے ملک کو آن ٹریک کرناہے،ہر آنے والا دن خوشحالی اور ترقی کا ہوگا، پی ٹی آئی ملکی سلامتی اور بقاء کی ضامن ہے آنے والی نسلوں کےروشن مستقبل کی ضامن ہے،تکلیفیں جتنی بھی اٹھانی پڑیں اٹھائیں گے لیکن منزل تک پہنچ کر ہی دم لیں گے،انھوں نے مذاحیہ انداز میں کہا کہ میرے سفید بالوں پر نہ جائیں گزشتہ 39 سالوں سے حلقہ عوام کی خدمت کر رہے ہیں بھائی اور میرے بیٹے عوام کے تابعداری میں کوئی کثر اٹھا نہیں رکھیں گے،آج جس مقام پر میں ہوں اس میں میرے حلقہ کے عوام کی محبتیں اور تعاون شامل ہے،جسے میں زندگی میں کبھی فراموش نہیں کر سکتا، حلقہ عوام کی وسیع تر مفاد میں چودہ اکتوبر کو حلقہ میں انتظامی تبدیلیاں بھی ہونگی ، نہ صرف ٹیکسلا شہر کے مسائل سے واقف ہوں بلکہ انھیں حل کرنے کا مصمم ارادہ کر رکھا ہے ، ٹیکسلا میں بچیوں کے لئے ایک ہائی سکول ، بچوں کا کالج ، ٹیکسلا کی جدید طرز پر سپورٹس سٹیڈیم کا قیام ، لوگوں کو بنیادی سہولیات انکی دہلیز تک پہنچانا ہمارا بنیادینصب العین ہے،ٹیکسلا کمپیوٹر رائزڈ لینڈ اراضی سنٹر صرف ایک ہے ہم ہر یونین کونسل میں لینڈ اراضی سنٹر کھولیں گے تاکہ لوگوںکو پریشانی سے بچایا جاسکے،جلسہ سے پی ٹی آئی کے امیدوار قومی اسمبلی منصور حیات خان نے بھی خطاب کیا،جلسہ میں سید دستار علی شاہ، سید نوید عباس، ملک پرویز ، قدیم خان ،ہمایوں اعوان،فرخ محمود مغل،سید مہتاب حسین شاہ ،سردار محمد علی ، ایڈووکیٹ مبشر نقوی،کے علاوہ پی ٹی آئی کے مقامی رہنماوں اور لوگوں کی کثیر تعداد موجود تھی،

ٹیکسلا( آئی این پی)وفاقی وزیر پٹرولیم غلام سرور خان نے کہا ہے کہ ملک کو بحرانی کیفیت سے نکالنے کے لئے سخت فیصلے ناگزیر ہیں،عوام اس کے لئے اپنے آپ کو تیار کر لے ،پریشانی وقتی ہوگی ، آنے والے دن ترقی او خوشحالی کے ہونگے،تکلیفیں جتنی بھی اٹھانی پڑیں اٹھائیں گے مگر منزل تک پہنچ کر دم لیں گے،میڈیا والے انصاف سے کام لیں ان کے پینتیس سالوں کا موازنہہمارے پینتیس دنوں سے نہ کریں،یہ کم ہوا کہ ملک کے چور پابند سلاسل ہیں،میڈیا اور ڈپلومیٹک سرکلز میں یہ تاثر دیا گیا

کہ شہباز شریف کے اسٹیلشمنٹ کے ساتھ رابطے ہیں،مسلم لیگ ن ملک دشمن قوتوں کے ایجنڈے پر ملک میں سیاست کر رہی ہے جسے ہمیشہ ہمیشہ کے لئے ختم کرنا ہے ، شاہ ولی ہاوس ٹیکسلا میں سید ریاض حسین شاہ کی جانب سے منعقدہ انتخابی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ پاکستان تحریک انصاف نے روز اول سے یہ فیصلہ کیا تھا کہ ملک کے چوروں ، لٹیروں کے ساتھ کوئی ڈیل کوئی کمپرومائز اور کسی قسم کا کوئی دباو برداشت نہیں کیا جائے گا،نواز مریم کی ضمانت کا ہرگز یہ مطلب نہیں کہ انکی جان خلاصی ہوگئی ، 302 کی ضمانت والوں کو بھی پھانسی ہوتی ہے،نواز ڈیل کے حوالے سے انکا کہنا تھا کہ سعودی حکومت میں جس طرح وزیر اعظم عمران خان کو پذیرائی بخشی اس بات کو اور تقویت ملی،اور جلتی پر تیل رانا مشہود کے بیان نے کردیا،کہ شہباز شریف کے ملک کی اسٹیبلشمنٹ کے ساتھ رابطے ہیں،تاہم شہباز شریف کی گرفتاری سے یہ تاثر غلط ثابت ہوگیا،غلام سرور خان کا کہنا تھا کہ سخت فیصلے ہونگے اور عوام کو انھیں برداشت بھی کرنا ہوگا تاہم یہ سخت فیصلے وقتی ہونگے ،ہم نے ملک کو آن ٹریک کرناہے،ہر آنے والا دن خوشحالی اور ترقی کا ہوگا، پی ٹی آئی ملکی سلامتی اور بقاء کی ضامن ہے آنے والی نسلوں کےروشن مستقبل کی ضامن ہے،تکلیفیں جتنی بھی اٹھانی پڑیں اٹھائیں گے لیکن منزل تک پہنچ کر ہی دم لیں گے،انھوں نے مذاحیہ انداز میں کہا کہ میرے سفید بالوں پر نہ جائیں گزشتہ 39 سالوں سے حلقہ عوام کی خدمت کر رہے ہیں بھائی اور میرے بیٹے عوام کے تابعداری میں کوئی کثر اٹھا نہیں رکھیں گے،آج جس مقام پر میں ہوں اس میں میرے حلقہ کے عوام کی محبتیں اور تعاون شامل ہے،جسے میں زندگی میں کبھی فراموش نہیں کر سکتا،

حلقہ عوام کی وسیع تر مفاد میں چودہ اکتوبر کو حلقہ میں انتظامی تبدیلیاں بھی ہونگی ، نہ صرف ٹیکسلا شہر کے مسائل سے واقف ہوں بلکہ انھیں حل کرنے کا مصمم ارادہ کر رکھا ہے ، ٹیکسلا میں بچیوں کے لئے ایک ہائی سکول ، بچوں کا کالج ، ٹیکسلا کی جدید طرز پر سپورٹس سٹیڈیم کا قیام ، لوگوں کو بنیادی سہولیات انکی دہلیز تک پہنچانا ہمارا بنیادینصب العین ہے،ٹیکسلا کمپیوٹر رائزڈ لینڈ اراضی سنٹر صرف ایک ہے ہم ہر یونین کونسل میں لینڈ

اراضی سنٹر کھولیں گے تاکہ لوگوںکو پریشانی سے بچایا جاسکے،جلسہ سے پی ٹی آئی کے امیدوار قومی اسمبلی منصور حیات خان نے بھی خطاب کیا،جلسہ میں سید دستار علی شاہ، سید نوید عباس، ملک پرویز ، قدیم خان ،ہمایوں اعوان،فرخ محمود مغل،سید مہتاب حسین شاہ ،سردار محمد علی ، ایڈووکیٹ مبشر نقوی،کے علاوہ پی ٹی آئی کے مقامی رہنماوں اور لوگوں کی کثیر تعداد موجود تھی،

loading...

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں