اہم خبریں

پاکستان پر امن ملک سے جنگی علاقے میں تبدیل ہوگیا، چوہدری نثار علی

  بدھ‬‮ 18 فروری‬‮ 2015  |  18:52
ہیوسٹن: وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار کا کہنا ہے کہ سانحہ نائن الیون سے پاکستان سب سے زیادہ متاثر ہوا اور یہ پر امن ملک سے جنگی علاقے میں تبدیل ہوگیا۔ ہیوسٹن میں انسٹی ٹیوٹ آف پیس سے خطاب کرتے ہوئے چوہدری نثار نے کہا کہ سانحہ نائن الیون میں کوئی بھی پاکستانی ملوث نہیں تھا لیکن اس سانحے کے سب سے زیادہ اثرات کا سامنا پاکستان کو ہی کرنا پڑا، گزشتہ 13 سال میں اس ملک نے کئی نائن الیون دیکھے۔ انہوں نے کہا پاکستان پر امن ملک سے جنگی علاقے میں تبدیل ہوگیا اورجنگیں کبھی مسائل کا حل نہیں

(خبر جا ری ہے)

کا حل نہیں ہوتیں۔

چوہدری نثار کا کہنا تھا کہ پاکستان پر پہلے اتنی توجہ نہیں دی گئی جو اب دی جارہی ہے جب کہ ہم آج بھی 30 لاکھ افغان مہاجرین کی مہمان نوازی کررہے ہیں۔

ہیوسٹن: وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار کا کہنا ہے کہ سانحہ نائن الیون سے پاکستان سب سے زیادہ متاثر ہوا اور یہ پر امن ملک سے جنگی علاقے میں تبدیل ہوگیا۔

ہیوسٹن میں انسٹی ٹیوٹ آف پیس سے خطاب کرتے ہوئے چوہدری نثار نے کہا کہ سانحہ نائن الیون میں کوئی بھی پاکستانی ملوث نہیں تھا لیکن اس سانحے کے سب سے زیادہ اثرات کا سامنا پاکستان کو ہی کرنا پڑا، گزشتہ 13 سال میں اس ملک نے کئی نائن الیون دیکھے۔ انہوں نے کہا پاکستان پر امن ملک سے جنگی علاقے میں تبدیل ہوگیا اورجنگیں کبھی مسائل کا حل نہیں ہوتیں۔

چوہدری نثار کا کہنا تھا کہ پاکستان پر پہلے اتنی توجہ نہیں دی گئی جو اب دی جارہی ہے جب کہ ہم آج بھی 30 لاکھ افغان مہاجرین کی مہمان نوازی کررہے ہیں۔

loading...