اہم خبریں

دنیا کا وہ ترقی یافتہ ملک جہاں کورونا سے زائد اموات خودکشی کے باعث ہونے کا خدشہ، ماہرین نے حیرت انگیز انکشافات کر دیئے

  جمعہ‬‮ 8 مئی‬‮‬‮ 2020  |  0:50
کینبرا(این این آئی)کورونا وائرس کے باعث لاک ڈان کے دوران  آسٹریلیا میں خودکشی سے ہلاکتوں کے واقعات میں 25 فیصد اضافہ ہونے کا امکان ہے۔آسٹریلوی ماہرین نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ کورونا کے باعث جاری لاک ڈائون کی وجہ سے آسٹریلیا میں کورونا سے زیادہ ہلاکتیں خودکشیوں سے ہونے کا امکان ہے۔آسٹریلوی ماہرین نے کہاہے کہ کورونا لاک ڈائون کی وجہ آسٹریلیا میں خودکشیوں کی شرح دگنی ہوسکتی ہے۔ میڈیارپورٹس کے مطابق سڈنی یونیورسٹی کے برین اینڈ مائینڈ سینٹر کی جانب سے ڈیٹا کی بنیاد پر جاری کی گئی ریسرچ میں یہ بات سامنے آئی کہ آسٹریلیا میں اب

(خبر جا ری ہے)

لاک ڈان کے اثرات کی وجہ سے آئندہ 5 سال میں 1500 خودکشیاں ہونے کا خدشہ ہے۔تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ لاک ڈان سے بیروزگاری کی شرح 10 فیصد رہی تو خودکشیوں میں 25 فیصد اضافہ ہوگا۔ بیروزگاری کی شرح 15 فیصد تک گئی تو خودکشیوں میں 50 فیصد اضافہ ہوجائے گا۔ماہرین کی جانب سے یہ خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے کہ آسٹریلیا میں سالانہ خودکشیوں کی تعداد 3 ہزار سے بڑھ کر ساڑھے 4 ہزار تک جاسکتی ہے، بیروزگاری کی وجہ سے خودکشی کرنے والوں میں نصف سے زائد تعداد نوجوانوں کی ہوسکتی ہے۔

کینبرا(این این آئی)کورونا وائرس کے باعث لاک ڈان کے دوران  آسٹریلیا میں خودکشی سے ہلاکتوں کے واقعات میں 25 فیصد اضافہ ہونے کا امکان ہے۔آسٹریلوی ماہرین نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ کورونا کے باعث جاری لاک ڈائون کی وجہ سے آسٹریلیا میں کورونا سے زیادہ ہلاکتیں خودکشیوں سے ہونے کا امکان ہے۔آسٹریلوی ماہرین نے کہاہے کہ کورونا لاک ڈائون کی وجہ آسٹریلیا میں خودکشیوں کی شرح دگنی ہوسکتی ہے۔

میڈیارپورٹس کے مطابق سڈنی یونیورسٹی کے برین اینڈ مائینڈ سینٹر کی جانب سے ڈیٹا کی بنیاد پر جاری کی گئی ریسرچ میں یہ بات سامنے آئی کہ آسٹریلیا میں اب تک کے لاک ڈان کے اثرات کی وجہ سے آئندہ 5 سال میں 1500 خودکشیاں ہونے کا خدشہ ہے۔تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ لاک ڈان سے بیروزگاری کی شرح 10 فیصد رہی تو خودکشیوں میں 25 فیصد اضافہ ہوگا۔ بیروزگاری کی شرح 15 فیصد تک گئی تو خودکشیوں میں 50 فیصد اضافہ ہوجائے گا۔ماہرین کی جانب سے یہ خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے کہ آسٹریلیا میں سالانہ خودکشیوں کی تعداد 3 ہزار سے بڑھ کر ساڑھے 4 ہزار تک جاسکتی ہے، بیروزگاری کی وجہ سے خودکشی کرنے والوں میں نصف سے زائد تعداد نوجوانوں کی ہوسکتی ہے۔

loading...

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں