اہم خبریں

تربوز گردے کی پتھری اور موٹاپے سے کس طرح نجات دلاسکتا ہے، طریقہ جانئے اور آج سے ہی عمل شروع کردیں

  ہفتہ‬‮ 23 جون‬‮ 2018  |  18:24
گرمیوں کا موسم شروع ہوتے ہی ہر طرف تربوز کی بہار نظر آتی ہے، یہ ایک ایسا پھل ہے جو نہ صرف گرمی کی شدت کو کم کرتا ہے بلکہ گردے کی پتھری، بیماری اور موٹاپے جیسی بیماریوں سے بھی نجات دلاتا ہے۔تربوز بیش بہا فوائد کا حامل پھل ہے جسے اگر اللہ تعالیٰ کا انسان کے لیے گرمی کا خصوصی تحفہ کہا جائے تو غلط نہ ہوگا، طبی ماہر کہتے ہیں کہ اس پھل کے استعمال سےہت ساری بیماریوں پر قابو پایا جاسکتا ہے۔ ڈاکٹر بلقیس کا کہنا تھا کہ ’تربوز اللہ تعالیٰ کا خاص تحفہ ہے جس کے

(خبر جا ری ہے)

بیماریوں کے علاج چھپے ہیں، جیسے کہ گرمیوں کا آغاز ہوتے ہی ایک بیماری ’یو آئی ٹی‘ زور پکڑ لیتی ہے جس کو دور بھگانے میں یہ معاون ثابت ہوسکتا ہے اس کے علاوہ گردے کی پتھری وغیرہ جیسی بیماریوں پر اس پھل کی مدد سے قابو پایا جاسکتا ہے۔ اُن کا کہنا تھا کہ اس پھل کی خاصیت یہ ہے کہ اس کو شوگر کے مریض نہیں کہا سکتے البتہ اس کے چھلکے سے بنا ہوا سالن ذیابیطس کے مریض آسانی سے کھا سکتے ہیں۔تربوز کےفوائد اور بیماریوں کا اعلاج بتاتے ہوئے اُن کا کہنا تھا کہ جن لوگوں کے گردوں میں بار بار پتھری کی شکایت ہوجاتی ہے یا جنہیں یورین کرنے میں مشکلات ہوتی ہیں وہ اس پھل کا استعمال کریں علاوہ ازیں یہ چہرے اور بالوں کی خوبصورتی کے لیے بھی استعمال کیا جاسکتا ہے۔اُن کا کہنا تھا کہ تربوز کا گودا، چھلکے تو فائدے مند ہیں تاہم اس کے چھلکے کے درمیان ہلکے زرد رنگ کی پرت کو اگر سکھا کر رکھ لیں اور پھر اسے چہرے اور بالوں پر لگائیں تو خوبصورتی میں اضافہ ہوتا ہے۔اجزاتربوز کے چھلکے،خربوزے کے چھلکے،تربوز کے بیچ،بھٹے کے بال،کلتی کی دال،جڑی بوٹی سرپھوکاطریقہ مشروب، تربوز اور خربوزے کے چھلکے کو فرائی پان میں ڈالیں ، پھر اس میں بھٹے کے بال اور کلتی کی دال، جڑی بوٹی سرپھوکا ملائیں اور تقریباً ڈیڑھ لیٹر پانی ڈال کر پکنے کے لیے چولہے پر چھوڑ دیں، جب یہ پک پک کر آدھا لیٹر رہ جائے تو اسے اتار کر بوتل میں بھر لیں۔

گرمیوں کا موسم شروع ہوتے ہی ہر طرف تربوز کی بہار نظر آتی ہے، یہ ایک ایسا پھل ہے جو نہ صرف گرمی کی شدت کو کم کرتا ہے بلکہ گردے کی پتھری، بیماری اور موٹاپے جیسی بیماریوں سے بھی نجات دلاتا ہے۔تربوز بیش بہا فوائد کا حامل پھل ہے جسے اگر اللہ تعالیٰ کا انسان کے لیے گرمی کا خصوصی تحفہ کہا جائے تو غلط نہ ہوگا، طبی ماہر کہتے ہیں کہ اس پھل کے استعمال سےہت ساری بیماریوں پر قابو پایا جاسکتا ہے۔ ڈاکٹر بلقیس کا کہنا تھا کہ ’تربوز اللہ تعالیٰ کا خاص تحفہ ہے

جس کے بہت سے بیماریوں کے علاج چھپے ہیں، جیسے کہ گرمیوں کا آغاز ہوتے ہی ایک بیماری ’یو آئی ٹی‘ زور پکڑ لیتی ہے جس کو دور بھگانے میں یہ معاون ثابت ہوسکتا ہے اس کے علاوہ گردے کی پتھری وغیرہ جیسی بیماریوں پر اس پھل کی مدد سے قابو پایا جاسکتا ہے۔ اُن کا کہنا تھا کہ اس پھل کی خاصیت یہ ہے کہ اس کو شوگر کے مریض نہیں کہا سکتے البتہ اس کے چھلکے سے بنا ہوا سالن ذیابیطس کے مریض آسانی سے کھا سکتے ہیں۔تربوز کےفوائد اور بیماریوں کا اعلاج بتاتے ہوئے اُن کا کہنا تھا کہ جن لوگوں کے گردوں میں بار بار پتھری کی شکایت ہوجاتی ہے یا جنہیں یورین کرنے میں مشکلات ہوتی ہیں وہ اس پھل کا استعمال کریں علاوہ ازیں یہ چہرے اور بالوں کی خوبصورتی کے لیے بھی استعمال کیا جاسکتا ہے۔اُن کا کہنا تھا کہ تربوز کا گودا، چھلکے تو فائدے مند ہیں تاہم اس کے چھلکے کے درمیان ہلکے زرد رنگ کی پرت کو اگر سکھا کر رکھ لیں اور پھر اسے چہرے اور بالوں پر لگائیں تو خوبصورتی میں اضافہ ہوتا ہے۔اجزاتربوز کے چھلکے،خربوزے کے چھلکے،تربوز کے بیچ،بھٹے کے بال،کلتی کی دال،جڑی بوٹی سرپھوکاطریقہ مشروب، تربوز اور خربوزے کے چھلکے کو فرائی پان میں ڈالیں ، پھر اس میں بھٹے کے بال اور کلتی کی دال، جڑی بوٹی سرپھوکا ملائیں اور تقریباً ڈیڑھ لیٹر پانی ڈال کر پکنے کے لیے چولہے پر چھوڑ دیں، جب یہ پک پک کر آدھا لیٹر رہ جائے تو اسے اتار کر بوتل میں بھر لیں۔

loading...

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں