اہم خبریں

ن لیگ کی جانب انتخابات میں مبینہ دھاندلی کے حوالے سے دستاویزات دولت مشترکہ مبصر مشن کے حوالے، دستاویزات میں کیاکچھ ہے؟ مشاہد اور مریم اورنگزیب نے وفد کے سامنے الزامات کے انبار لگا دئیے

  پیر‬‮ 23 جولائی‬‮ 2018  |  16:45
لاہور ( این این آئی) مسلم لیگ (ن) کے سینیٹر مشاہد حسین سید نے کہا ہے کہ غیر جانبدارانہ اور شفاف انتخابات پا کستان کے لئے ناگزیر ہیں، مسلم لیگ (ن) کو انتخابی مہم کے لئے برابر مواقع اور سازگار ماحول فراہم نہیں کیا گیا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے کامن ویلتھ کے 20 رکنی انتخابی مبصرین کے وفد کو انتخابات میں پری پول دھاندلی کے حوالے سے بریفنگ دیتے ہوئے کیا ۔ نائیجیریا کے سابق صدر دولت مشترکہ کے انتخابی مبصرین کے وفد کے سربراہ ہیں۔اس موقع پر پاکستان مسلم لیگ (ن) کی3 ترجمان مریم اورنگزیب بھی موجود

(خبر جا ری ہے)

حسین نے انتخابات میں دھاندلی کے حوالے سے تین دستاویز ات دولت مشترکہ کے وفد کے حوالے کر دیں ،دستاویز میں مسلم لیگ (ن) کے قائد نوازشریف کے مقدمہ اور فیصلہ پر مبنی حقائق نامہ شامل ہیں ۔ اس کے ساتھ مسلم لیگ (ن) کو یکساں مواقع نہ ملنے اور کارکنوں پر دہشتگردی کے مقدمات کی تفصیلات بھی دستاویزات میں شامل ہیں ۔ مشاہد حسین سید نے کہا کہ انتخابی مہم کیلئے برابر مواقع اور سازگار ماحول فراہم نہیں کیا گیا۔

لاہور ( این این آئی) مسلم لیگ (ن) کے سینیٹر مشاہد حسین سید نے کہا ہے کہ غیر جانبدارانہ اور شفاف انتخابات پا کستان کے لئے ناگزیر ہیں، مسلم لیگ (ن) کو انتخابی مہم کے لئے برابر مواقع اور سازگار ماحول فراہم نہیں کیا گیا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے کامن ویلتھ کے 20 رکنی انتخابی مبصرین کے وفد کو انتخابات میں پری پول دھاندلی کے حوالے سے بریفنگ دیتے ہوئے کیا ۔ نائیجیریا کے سابق صدر دولت مشترکہ کے انتخابی مبصرین کے وفد کے سربراہ ہیں۔اس موقع پر پاکستان مسلم لیگ (ن) کی3

ترجمان مریم اورنگزیب بھی موجود تھیں ۔مشاہد حسین نے انتخابات میں دھاندلی کے حوالے سے تین دستاویز ات دولت مشترکہ کے وفد کے حوالے کر دیں ،دستاویز میں مسلم لیگ (ن) کے قائد نوازشریف کے مقدمہ اور فیصلہ پر مبنی حقائق نامہ شامل ہیں ۔ اس کے ساتھ مسلم لیگ (ن) کو یکساں مواقع نہ ملنے اور کارکنوں پر دہشتگردی کے مقدمات کی تفصیلات بھی دستاویزات میں شامل ہیں ۔ مشاہد حسین سید نے کہا کہ انتخابی مہم کیلئے برابر مواقع اور سازگار ماحول فراہم نہیں کیا گیا۔

موضوعات:

loading...

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں