اہم خبریں

انتخابی دھاندلی کی تحقیقات کو یقینی بنانے کے لیے وزیراعظم عمران خان نے کیا اہم فیصلہ کیا ہے؟

  منگل‬‮ 25 ستمبر‬‮ 2018  |  23:29
اسلام آباد (این این آئی)نجی ٹی وی کے مطابق تحریک انصاف نے مبینہ انتخابی دھاندلی کی تحقیقات کیلئے بنائی جانیوالی پارلیمانی کمیٹی کیلئے حکومت کی جانب سے دیئے گئے ناموں پر غور شروع کردیا۔پارلیمانی کمیٹی ارکان کیلئے شیریں مزاری، شفقت محمود، علی محمد خان اور عامر ڈوگر کے ناموں پر غور کیا جارہا ہے جبکہ مسلم لیگ (ق) کی طرف سے بشیر چیمہ کا نام دیا گیا ہے۔میڈیا رپورٹ کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کی سینئر قیادت نے عمران خان کو مشورہ دیا کہ وہ پارلیمانی کمیٹی کی سربراہی اپنے پاس رکھیں تاہم حتمی فیصلہ ایک دو روز میں وزیراعظم

(خبر جا ری ہے)

اجلاس میں کیا جائے گا۔دوسری جانب مسلم لیگ (ن) نے مبینہ انتخابی دھاندلی کیلئے بنائی جانے والی پارلیمانی کمیٹی کیلئے احسن اقبال، رانا تنویر، رانا ثناء اللہ اور مرتضیٰ جاوید عباسی کو نامزد کیا ہے۔ اس سے قبل حزب اختلاف کی جماعتوں نے مطالبہ کیا تھا کہ دھاندلی تحقیقات کیلئے بنائی جانے والی کمیٹی میں حکومت اور اپوزیشن کی برابر نمائندگی اور کمیٹی کی چیئرمین شپ اپوزیشن کو دی جائے۔

اسلام آباد (این این آئی)نجی ٹی وی کے مطابق تحریک انصاف نے مبینہ انتخابی دھاندلی کی تحقیقات کیلئے بنائی جانیوالی پارلیمانی کمیٹی کیلئے حکومت کی جانب سے دیئے گئے ناموں پر غور شروع کردیا۔پارلیمانی کمیٹی ارکان کیلئے شیریں مزاری، شفقت محمود، علی محمد خان اور عامر ڈوگر کے ناموں پر غور کیا جارہا ہے جبکہ مسلم لیگ (ق) کی طرف سے بشیر چیمہ کا نام دیا گیا ہے۔میڈیا رپورٹ کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کی سینئر قیادت نے عمران خان کو مشورہ دیا کہ وہ پارلیمانی کمیٹی کی

سربراہی اپنے پاس رکھیں تاہم حتمی فیصلہ ایک دو روز میں وزیراعظم کی زیرصدارت اجلاس میں کیا جائے گا۔دوسری جانب مسلم لیگ (ن) نے مبینہ انتخابی دھاندلی کیلئے بنائی جانے والی پارلیمانی کمیٹی کیلئے احسن اقبال، رانا تنویر، رانا ثناء اللہ اور مرتضیٰ جاوید عباسی کو نامزد کیا ہے۔ اس سے قبل حزب اختلاف کی جماعتوں نے مطالبہ کیا تھا کہ دھاندلی تحقیقات کیلئے بنائی جانے والی کمیٹی میں حکومت اور اپوزیشن کی برابر نمائندگی اور کمیٹی کی چیئرمین شپ اپوزیشن کو دی جائے۔

loading...

آج کی سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں