اہم خبریں

شمال کوریا کا بیلسٹک میزائل کا کامیاب تجربہ،پورا امریکہ نشانے پر آگیا میزائل نے950کلو میٹر کا راستہ کتنے منٹ میں طے کیا، دنیا حیران

  بدھ‬‮ 29 ‬‮نومبر‬‮ 2017  |  17:20
پیا نگ یا نگ (آن لائن)شمالی کوریا نے ایسے بیلسٹک میزائل کا کامیاب تجربہ کیا ہے جو امریکا کے کسی بھی مقام کو نشانہ بنانے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ غیر ملکی خبر ایجنسی ' کے مطابق شمالی کوریا نے ایک اور بین البراعظمی بیلسٹک میزائل کا تجربہ کیا ہے جو امریکا میں کہیں بھی نشانہ بناسکتا ہے۔شمالی کوریا کے سرکاری ٹی وی پر میزائل تجربے سے متعلق بتایا گیا ہے کہ بین البراعظمی بیلسٹک میزائل نے 53 منٹ کی پرواز میں 950 کلو میٹرسفر کیا اور اس کی سطح زمین سے بلندی 4 ہزار 475 کلو میٹر رہی جو انٹرنیشنل

(خبر جا ری ہے)

جو انٹرنیشنل اسپیس اسٹیشن کی بلندی سے 10 گنا زیادہ ہے۔شمالی کوریا کے سربراہ کم جونگ ان نے نئے بیلسٹک میزائل تجربے کو کامیاب قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ شمالی کوریا نے جوہری ریاست بننے کا تاریخی مقصد حاصل کرلیا ہے۔شمالی کوریا کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ شمالی کوریا ذمہ دار جوہر ملک ہے جس نے جوہری ہتھیار امریکا کی جوہری دھمکیوں اور بلیک میل کرنے کی پالیسیوں کو دیکھتے ہوئے حق حاکمیت اور ملکی سالمیت قائم کرنے کے لئے بنائے۔دوسری جانب امریکا نے کہا ہے کہ شمالی کوریا کا بین البراعظمی بیلسٹک میزائل امریکا اور اس کے اتحادیوں کے لئے خطرے کا باعث نہیں بنے گا۔امریکی سیکرٹری دفاع جیم میٹس کا کہنا ہے کہ شمالی کوریا کی میزائل بنانے کی صلاحیت اور مسلسل میزائل تجربات دنیا کو دھمکانے کی کوشش ہے۔

پیا نگ یا نگ (آن لائن)شمالی کوریا نے ایسے بیلسٹک میزائل کا کامیاب تجربہ کیا ہے جو امریکا کے کسی بھی مقام کو نشانہ بنانے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ غیر ملکی خبر ایجنسی ‘ کے مطابق شمالی کوریا نے ایک اور بین البراعظمی بیلسٹک میزائل کا تجربہ کیا ہے جو امریکا میں کہیں بھی نشانہ بناسکتا ہے۔شمالی کوریا کے سرکاری ٹی وی پر میزائل تجربے سے متعلق بتایا گیا ہے

کہ بین البراعظمی بیلسٹک میزائل نے 53 منٹ کی پرواز میں 950 کلو میٹرسفر کیا اور اس کی سطح زمین سے بلندی 4 ہزار 475 کلو میٹر رہی جو انٹرنیشنل اسپیس اسٹیشن کی بلندی سے 10 گنا زیادہ ہے۔شمالی کوریا کے سربراہ کم جونگ ان نے نئے بیلسٹک میزائل تجربے کو کامیاب قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ شمالی کوریا نے جوہری ریاست بننے کا تاریخی مقصد حاصل کرلیا ہے۔شمالی کوریا کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ شمالی کوریا ذمہ دار جوہر ملک ہے جس نے جوہری ہتھیار امریکا کی جوہری دھمکیوں اور بلیک میل کرنے کی پالیسیوں کو دیکھتے ہوئے حق حاکمیت اور ملکی سالمیت قائم کرنے کے لئے بنائے۔دوسری جانب امریکا نے کہا ہے کہ شمالی کوریا کا بین البراعظمی بیلسٹک میزائل امریکا اور اس کے اتحادیوں کے لئے خطرے کا باعث نہیں بنے گا۔امریکی سیکرٹری دفاع جیم میٹس کا کہنا ہے کہ شمالی کوریا کی میزائل بنانے کی صلاحیت اور مسلسل میزائل تجربات دنیا کو دھمکانے کی کوشش ہے۔

loading...