اہم خبریں

دو ماہ کے دوران بڑی صنعتوں کی پیداوار میں 11 فیصد اضافہ

  منگل‬‮ 7 ‬‮نومبر‬‮ 2017  |  17:21
اسلام آباد(ویب ڈیسک)  رواں مالی سال کے پہلے دو ماہ میں بڑی صںعتوں کی پیداوار میں 11 اعشاریہ 3 فیصد اضافہ ہوا ۔ آئرن سٹیل کا شعبہ 50 فیصد ترقی کے ساتھ تمام شعبوں پر بازی لے گیا ۔ معاشی ترقی کی ثمرات نظر آنے لگے جس کے باعث عوام کیقوت خرید میں اضافے کے ساتھ ساتھ ترقیاتی کاموں کی رفتار بھی بڑھ گئی ہے اور صنعتوں کا پہیہ تیزی سے گھومنے لگا ۔ جولائی سے اگست کے دوران بڑی صنعتوں کی پیداوار 11 اعشاریہ 3 فیصد تک پہنچ گئی جبکہ گذشتہ مالی سال کے اسی عرصے کے دوران بڑیصنعتوں

(خبر جا ری ہے)

دوران بڑیصنعتوں کی پیداوار 2 اعشاریہ 5 فیصد رہی تھی ۔دوسری جانب صرف اگست میں ہی بڑی صنعتوں کی پیداوار 8 اعشاریہ 5 فیصد ریکارڈ کی گئی ۔ ملک میں عوام کی قوت خرید میں اضافے کا اندازہ اس بات سے باآسانی لگایا جاسکتا ہے کہ دو ماہ کے دوران آئرن سٹیل کا شعبہ 50 فیصد ترقی کے ساتھ تمام شعبوں پر بھاری رہا ۔ آٹو سیکٹر 30 فیصد ترقی کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہا ، اسی طرح لکڑی کی مصنوعات کی پیداوار میں اٹھارہ  فیصد ، انجینئرنگ کے شعبے میں 18 فیصد ، پیٹرولیم مصںوعات 16 فیصد ، ادویات کے شعبے میں ترقی کی شرح 11 فیصد ، چمڑے کی مصںوعات کی پیداوار میں 14 فیصد اور کھانے پینے کی اشیاء بنانے والی صںعتوں کی پیداوار میں 13 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا ۔

اسلام آباد(ویب ڈیسک)  رواں مالی سال کے پہلے دو ماہ میں بڑی صںعتوں کی پیداوار میں 11 اعشاریہ 3 فیصد اضافہ ہوا ۔ آئرن سٹیل کا شعبہ 50 فیصد ترقی کے ساتھ تمام شعبوں پر بازی لے گیا ۔ معاشی ترقی کی ثمرات نظر آنے لگے جس کے باعث عوام کیقوت خرید میں اضافے کے ساتھ ساتھ ترقیاتی کاموں کی رفتار بھی بڑھ گئی ہے اور صنعتوں کا پہیہ تیزی سے گھومنے لگا ۔ جولائی سے اگست کے دوران بڑی صنعتوں کی پیداوار 11 اعشاریہ 3 فیصد تک پہنچ گئی

جبکہ گذشتہ مالی سال کے اسی عرصے کے دوران بڑیصنعتوں کی پیداوار 2 اعشاریہ 5 فیصد رہی تھی ۔دوسری جانب صرف اگست میں ہی بڑی صنعتوں کی پیداوار 8 اعشاریہ 5 فیصد ریکارڈ کی گئی ۔ ملک میں عوام کی قوت خرید میں اضافے کا اندازہ اس بات سے باآسانی لگایا جاسکتا ہے کہ دو ماہ کے دوران آئرن سٹیل کا شعبہ 50 فیصد ترقی کے ساتھ تمام شعبوں پر بھاری رہا ۔ آٹو سیکٹر 30 فیصد ترقی کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہا ، اسی طرح لکڑی کی مصنوعات کی پیداوار میں اٹھارہ  فیصد ، انجینئرنگ کے شعبے میں 18 فیصد ، پیٹرولیم مصںوعات 16 فیصد ، ادویات کے شعبے میں ترقی کی شرح 11 فیصد ، چمڑے کی مصںوعات کی پیداوار میں 14 فیصد اور کھانے پینے کی اشیاء بنانے والی صںعتوں کی پیداوار میں 13 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا ۔

loading...